Benefits of desi/organic Mustard Oil - سرسوں کا تیل ہمیں کیا دے سکتا ہے

Posted by Fawzan Shahid on

سرسوں کا تیل نہ صرف کھانے بلکہ جلد اور بالوں کے لیے بطور پرسنل کیئر پراڈکٹ بھی عرصے سے استعمال کیا جاتا رہا۔

گزشتہ چد دہائیوں کے دوران کھانے کے مصنوعی تیلوں نے صارفین کو عارضی طور پر سرسوں کے تیل سے دور کیا تاہم گزشتہ کچھ عرصے کے دوران مصنوعی کوکنگ آئل کی خرابیوں سے واقف ہونے کے بعد غذاؤں کو صحت مند رکھنے کے خواہاں افراد ایک مرتبہ پھر سرسوں کے تیل کی جانب مائل ہوئے ہیں۔

سرسوں کے تیل میں دیسی غذائی اجزا اسے ہر عمر کے افراد کے لیے ایک آئیڈیل غذا بناتے ہیں۔

دانت جگمگائیں
چٹکی بھر آئیوڈین سے پاک نمک لیں اور کچھ مقدار میں سرسوں کے تیل میں شامل کریں، چٹکی بھر ہلدی بھی شامل کرسکتے ہیں۔ان اشیا کو ملا لیں، اب اس مکسچر کو شہادت کی انگلی کی مدد سے دو منٹ تک دانتوں پر مالش کریں۔ اب چند منٹ کے لیے منہ بند کر کے رکھیں اور پھر نیم گرمی پانی سے کلی کر لیں۔ اس مکسچر کے مستقل استعمال سے چند روز میں آپ کو دانتوں کے اجلے پن میں واضح فرق محسوس ہو گا۔
دل کے لیے فائدہ مند
امریکن جرنل آف کلینیکل نیوٹریشن میں شائع ایک تحقیق کے مطابق کھانوں میں سرسوں کے تیل کو شامل کرنے دل کی صحت کے لیے فائدہ مند ثابت ہوتا ہے، اس میں موجود مونوسچورٹیڈ فیٹی ایسڈز جسم میں نقصان دہ کولیسٹرول کی سطح کم کرتے ہیں جبکہ خون میں چربی کی سطح مستحکم رکھتے اور دوران خون بہتر رکھنے میں مدد دیتے ہیں۔
ایڑیاں پھٹنے اور جلد ٹوٹ جانے والے ناخن کا مسئلہ دور کرے
ایڑیاں پھٹنے کا مسئلہ مون سون اور سردیوں میں کافی عام ہوجاتا ہے، اس سے نجات کے لیے موم اور سرسوں کے تیل کی یکساں مقدار کو مکس کرکے گرم کریں، جس سے وہ گاڑھا ہو جائے گا۔ ایڑیوں کے متاثرہ حصے پر اس مکسچر کو لگائیں اور کاٹن کے موزے پہن کر سو جائیں۔ سرسوں کا تیل ناخن پر لگایا جائے تو یہ ان میں جذب ہو کر ناخنوں کو مضبوط کرتا ہے۔
انفیکشن سے حفاظت
سرسوں کا تیل بیکٹریا کش ، فنگل کش اور وائرس سے حفاظت مہیا کرتا ہے۔ جسم کی بیرونی سطح پر استعمال یا کھانے میں ڈال کر استعمال کرنا موسمی انفیکشن سمیت نظام ہاضمہ کے انفیکشن کے خلاف مزاحمت کرتا ہے۔
دوران خون بہتر کرے
سرسوں کے تیل سے جسم پر مالش کرنا دوران خون بہتر رکھتا ہے۔ اس سے جلد کی ساخت بہتر ہوتی ہے جبکہ مسلز پر دباﺅ میں کمی آتی ہے۔ یہ پسینے کے غدود کو حرکت میں لاکر جسم سے زہریلے مواد کو خارج کرنے میں مدد دیتا ہے۔
جلد کے لیے بہترین
سرسوں کا تیل وٹامن ای سے بھرپور ہوتا ہے جو جلد کے لیے بہترین ہوتا ہے، اسے جلد پر لگانے سے فائن لائنز اور جھریوں میں کمی آتی ہے اور یہ سن اسکرین کی طرح کام کرتا ہے۔ جسم پر تیل لگاتے وقت اس کی مناسب مقدار استعمال کرنی چاہیے۔

ناریل کے تیل اور سرسوں کے تیل کی یکساں مقدار کو ملاکر مالش کرنا جلد کی رنگت کو بھی بہتر بناتا ہے۔
بالوں کا گرنا روکے اور لمبے گھنے بال دے
بال گر رہے ہوں یا ان کے بڑھنے کی رفتار سست ہو تو سرسوں کا تیل اس حوالے سے مددگار ثابت ہوسکتا ہے۔ سرسوں کے تیل میں موجود بیٹا کیروٹین بالوں کی نشوونما کی رفتار تیز کردیتا ہے، اس کی مالش سے سر کے اندر دوران خون بہتر ہوتا ہے جبکہ بیکٹریا کش خصوصیات سر کو انفیکشن سے بچاتی ہیں۔ اسی طرح سرسوں کے بیج کو پیس کر پیسٹ بناکر سرسوں کے تیل میں ملا کر سر پر رات بھر لگا رہنے دیں تو اس سے بالوں کے گرنے کے مسئلے کو کنٹرول کرنے میں مدد مل سکتی ہے۔

دیسی سرسوں کا تیل حاصل کرنے کے لیے ابھی ای کھوکھا کا شاپ سیکشن وزٹ کریں


Share this post



← Older Post Newer Post →